صحیح بخاری – حدیث نمبر 251

صحیح بخاری – حدیث نمبر 251

باب: اس بارے میں کہ ایک صاع یا اسی طرح کسی چیز کے وزن بھر پانی سے غسل کرنا چاہیے۔

حدیث نمبر: 251
حَدَّثَنَا عَبْدُ اللَّهِ بْنُ مُحَمَّدٍ ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ حَدَّثَنِي عَبْدُ الصَّمَدِ ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ حَدَّثَنِي شُعْبَةُ ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ حَدَّثَنِي أَبُو بَكْرِ بْنُ حَفْصٍ ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ سَمِعْتُ أَبَا سَلَمَةَ ، ‏‏‏‏‏‏يَقُولُ:‏‏‏‏ دَخَلْتُ أَنَا وَأَخُو عَائِشَةَ عَلَى عَائِشَةَ ، ‏‏‏‏‏‏فَسَأَلَهَا أَخُوهَا عَنْ غُسْلِ النَّبِيِّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ ؟فَدَعَتْ بِإِنَاءٍ نَحْوًا مِنْ صَاعٍ، ‏‏‏‏‏‏فَاغْتَسَلَتْ وَأَفَاضَتْ عَلَى رَأْسِهَا وَبَيْنَنَا وَبَيْنَهَا حِجَابٌ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ أَبُو عَبْد اللَّهِ:‏‏‏‏ قَالَ يَزِيدُ بْنُ هَارُونَ ، ‏‏‏‏‏‏ وَبَهْزٌ ، ‏‏‏‏‏‏ وَالْجُدِّيُّ ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ شُعْبَةَ :‏‏‏‏ قَدْرِ صَاعٍ.

حدیث کی عربی عبارت (بغیر اعراب)

حدیث نمبر: 251
حدثنا عبد الله بن محمد ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ حدثني عبد الصمد ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ حدثني شعبة ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ حدثني أبو بكر بن حفص ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ سمعت أبا سلمة ، ‏‏‏‏‏‏يقول:‏‏‏‏ دخلت أنا وأخو عائشة على عائشة ، ‏‏‏‏‏‏فسألها أخوها عن غسل النبي صلى الله عليه وسلم ؟فدعت بإناء نحوا من صاع، ‏‏‏‏‏‏فاغتسلت وأفاضت على رأسها وبيننا وبينها حجاب، ‏‏‏‏‏‏قال أبو عبد الله:‏‏‏‏ قال يزيد بن هارون ، ‏‏‏‏‏‏ وبهز ، ‏‏‏‏‏‏ والجدي ، ‏‏‏‏‏‏عن شعبة :‏‏‏‏ قدر صاع.

حدیث کی عربی عبارت (مکمل اردو حروف تہجی میں)

حدیث نمبر: 251
حدثنا عبد اللہ بن محمد ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ حدثنی عبد الصمد ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ حدثنی شعبۃ ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ حدثنی ابو بکر بن حفص ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ سمعت ابا سلمۃ ، ‏‏‏‏‏‏یقول:‏‏‏‏ دخلت انا واخو عائشۃ على عائشۃ ، ‏‏‏‏‏‏فسالہا اخوہا عن غسل النبی صلى اللہ علیہ وسلم ؟فدعت باناء نحوا من صاع، ‏‏‏‏‏‏فاغتسلت وافاضت على راسہا وبیننا وبینہا حجاب، ‏‏‏‏‏‏قال ابو عبد اللہ:‏‏‏‏ قال یزید بن ہارون ، ‏‏‏‏‏‏ وبہز ، ‏‏‏‏‏‏ والجدی ، ‏‏‏‏‏‏عن شعبۃ :‏‏‏‏ قدر صاع.

حدیث کا اردو ترجمہ

ہم سے عبداللہ بن محمد نے حدیث بیان کی، انہوں نے کہا کہ ہم سے عبدالصمد نے، انہوں نے کہا ہم سے شعبہ نے، انہوں نے کہا ہم سے ابوبکر بن حفص نے، انہوں نے کہا کہ میں نے ابوسلمہ سے یہ حدیث سنی کہ میں (ابوسلمہ) اور عائشہ (رض) کے بھائی عائشہ (رض) کی خدمت میں گئے۔ ان کے بھائی نے نبی کریم کے غسل کے بارے میں سوال کیا۔ تو آپ نے صاع جیسا ایک برتن منگوایا۔ پھر غسل کیا اور اپنے اوپر پانی بہایا۔ اس وقت ہمارے درمیان اور ان کے درمیان پردہ حائل تھا۔ ابوعبداللہ (امام بخاری (رح)) کہتے ہیں کہ یزید بن ہارون، بہز اور جدی نے شعبہ سے قدر صاع کے الفاظ روایت کئے ہیں۔ (نوٹ : صاع کے اندر 2.488 کلو گرام ہوتا ہے۔ )

حدیث کا انگریزی ترجمہ (English Translation)

Narrated Abu Salama (RA): Aishas brother and I went to Aisha (RA) and he asked her about the bath of the Prophet ﷺ. She brought a pot containing about a Sa of water and took a bath and poured it over her head and at what time there was a screen between her and us.

اس پوسٹ کو آگے نشر کریں