Deprecated: version_compare(): Passing null to parameter #2 ($version2) of type string is deprecated in /home/u482667647/domains/ihyas.com/public_html/DifaeHadith/wp-content/plugins/elementor/core/experiments/manager.php on line 170
صحیح بخاری جلد اول :كتاب التيمم (تيمم کا بیان) : حدیث 345 - Difae Hadith - دفاع حدیث

صحیح بخاری جلد اول :كتاب التيمم (تيمم کا بیان) : حدیث 345

كتاب التيمم
کتاب: تیمم کے احکام و مسائل
.(THE BOOK OF TAYAMMUM (RUBBING HANDS AND FEET WITH DUST
7- بَابُ إِذَا خَافَ الْجُنُبُ عَلَى نَفْسِهِ الْمَرَضَ أَوِ الْمَوْتَ أَوْ خَافَ الْعَطَشَ، تَيَمَّمَ:
باب: جب جنبی کو (غسل کی وجہ سے) مرض بڑھ جانے کا یا موت ہونے کا یا (پانی کے کم ہونے کی وجہ سے) پیاس کا ڈر ہو تو تیمم کر لے۔
وَيُذْكَرُ أَنَّ عَمْرَو بْنَ الْعَاصِ أَجْنَبَ فِي لَيْلَةٍ بَارِدَةٍ فَتَيَمَّمَ وَتَلَا:‏‏‏‏ وَلا تَقْتُلُوا أَنْفُسَكُمْ إِنَّ اللَّهَ كَانَ بِكُمْ رَحِيمًا سورة النساء آية 29 فَذَكَرَ لِلنَّبِيِّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ فَلَمْ يُعَنِّفْ.
کہا جاتا ہے کہ عمرو بن العاص رضی اللہ عنہ کو ایک جاڑے کی رات میں غسل کی حاجت ہوئی۔ تو آپ نے تیمم کر لیا اور یہ آیت تلاوت کی «ولا تقتلوا أنفسكم إن الله كان بكم رحيما» اپنی جانوں کو ہلاک نہ کرو، بیشک اللہ تعالیٰ تم پر بڑا مہربان ہے۔ پھر اس کا ذکر نبی کریم صلی اللہ علیہ وسلم کی خدمت میں ہوا تو آپ صلی اللہ علیہ وسلم نے ان کی کوئی ملامت نہیں فرمائی۔

[quote arrow=”yes”]

1: حدیث اعراب کے ساتھ:[sta_anchor id=”top”]

2: حدیث عربی رسم الخط میں بغیراعراب کے ساتھ:

3: حدیث اردو رسم الخط میں بغیراعراب کے ساتھ:

4: حدیث کا اردو ترجمہ:

5: حدیث کی اردو تشریح:

English Translation :6 

[/quote]

حدیث اعراب کے ساتھ:  [sta_anchor id=”artash”]

حدیث نمبر345:

حَدَّثَنَا بِشْرُ بْنُ خَالِدٍ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ حَدَّثَنَا مُحَمَّدٌ هُوَ غُنْدَرٌ، ‏‏‏‏‏‏أَخْبَرَنَا شُعْبَةُ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ سُلَيْمَانَ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ أَبِي وَائِلٍ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ قَالَ أَبُو مُوسَى لِعَبْدِ اللَّهِ بْنِ مَسْعُود”إِذَا لَمْ يَجِدِ الْمَاءَ لَا يُصَلِّي، ‏‏‏‏‏‏قَالَ عَبْدُ اللَّهِ:‏‏‏‏ لَوْ رَخَّصْتُ لَهُمْ فِي هَذَا كَانَ إِذَا وَجَدَ أَحَدُهُمُ الْبَرْدَ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ هَكَذَا يَعْنِي تَيَمَّمَ وَصَلَّى”، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ قُلْتُ:‏‏‏‏ فَأَيْنَ قَوْلُ عَمَّارٍ لِعُمَرَ؟ قَالَ:‏‏‏‏ إِنِّي لَمْ أَرَ عُمَرَ قَنِعَ بِقَوْلِ عَمَّارٍ.
الخط میں بغیراعراب کے ساتھ:        [sta_anchor id=”arnotash”] 
346 ـ حدثنا بشر بن خالد، قال حدثنا محمد ـ هو غندر ـ عن شعبة، عن سليمان، عن أبي وائل، قال قال أبو موسى لعبد الله بن مسعود إذا لم يجد الماء لا يصلي‏.‏ قال عبد الله لو رخصت لهم في هذا، كان إذا وجد أحدهم البرد قال هكذا ـ يعني تيمم وصلى ـ قال قلت فأين قول عمار لعمر قال إني لم أر عمر قنع بقول عمار‏.‏
حدیث اردو رسم الخط میں بغیراعراب کے ساتھ:   [sta_anchor id=”urnotash”]
346 ـ حدثنا بشر بن خالد، قال حدثنا محمد ـ ہو غندر ـ عن شعبۃ، عن سلیمان، عن ابی وایل، قال قال ابو موسى لعبد اللہ بن مسعود اذا لم یجد الماء لا یصلی‏.‏ قال عبد اللہ لو رخصت لہم فی ہذا، کان اذا وجد احدہم البرد قال ہکذا ـ یعنی تیمم وصلى ـ قال قلت فاین قول عمار لعمر قال انی لم ار عمر قنع بقول عمار‏.‏
ا اردو ترجمہ:   [sta_anchor id=”urdtrjuma”]

ابوموسیٰ نے عبداللہ بن مسعود سے کہا کہ اگر (غسل کی حاجت ہو اور) پانی نہ ملے تو کیا نماز نہ پڑھی جائے۔ عبداللہ نے فرمایا، ہاں! اگر مجھے ایک مہینہ تک بھی پانی نہ ملے تو میں نماز نہ پڑھوں گا۔ اگر اس میں لوگوں کو اجازت دے دی جائے تو سردی معلوم کر کے بھی لوگ تیمم سے نماز پڑھ لیں گے۔ ابوموسیٰ کہتے ہیں کہ میں نے کہا کہ پھر عمر رضی اللہ عنہ کے سامنے عمار رضی اللہ عنہ کے قول کا کیا جواب ہو گا۔ بولے کہ مجھے تو نہیں معلوم ہے کہ عمر رضی اللہ عنہ عمار رضی اللہ عنہ کی بات سے مطمئن ہو گئے تھے۔

حدیث کی اردو تشریح:   [sta_anchor id=”urdtashree”]

 

English Translation:[sta_anchor id=”engtrans”] 

Narrated Abu Wail: Abu Musa said to `Abdullah bin Mas`ud, "If one does not find water (for ablution) can he give up the prayer?” `Abdullah replied, "If you give the permission to perform Tayammum they will perform Tayammum even if water was available if one of them found it cold.” Abu Musa said, "What about the statement of `Ammar to `Umar?” `Abdullah replied, "`Umar was not satisfied by his statement.”

اس پوسٹ کو آگے نشر کریں