صحیح بخاری – حدیث نمبر 305

صحیح بخاری – حدیث نمبر 305

باب: اس بارے میں کہ حائضہ بیت اللہ کے طواف کے علاوہ حج کے باقی ارکان پورا کرے گی۔

حدیث نمبر: 305
حَدَّثَنَا أَبُو نُعَيْمٍ ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ حَدَّثَنَا عَبْدُ الْعَزِيزِ بْنُ أَبِي سَلَمَةَ ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ عَبْدِ الرَّحْمَنِ بْنِ الْقَاسِمِ ، ‏‏‏‏‏‏عَنْ الْقَاسِمِ بْنِ مُحَمَّدٍ ، ‏‏‏‏‏‏عَنْعَائِشَةَ ، ‏‏‏‏‏‏قَالَتْ:‏‏‏‏ خَرَجْنَا مَعَ النَّبِيِّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ لَا نَذْكُرُ إِلَّا الْحَجَّ، ‏‏‏‏‏‏فَلَمَّا جِئْنَا سَرِفَ طَمِثْتُ، ‏‏‏‏‏‏فَدَخَلَ عَلَيَّ النَّبِيُّ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ وَأَنَا أَبْكِي، ‏‏‏‏‏‏فَقَالَ:‏‏‏‏ مَا يُبْكِيكِ ؟ قُلْتُ:‏‏‏‏ لَوَدِدْتُ وَاللَّهِ أَنِّي لَمْ أَحُجَّ الْعَامَ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ لَعَلَّكِ نُفِسْتِ ؟ قُلْتُ:‏‏‏‏ نَعَمْ، ‏‏‏‏‏‏قَالَ:‏‏‏‏ فَإِنَّ ذَلِكِ شَيْءٌ كَتَبَهُ اللَّهُ عَلَى بَنَاتِ آدَمَ، ‏‏‏‏‏‏فَافْعَلِي مَا يَفْعَلُ الْحَاجُّ غَيْرَ أَنْ لَا تَطُوفِي بِالْبَيْتِ حَتَّى تَطْهُرِي.

حدیث کی عربی عبارت (بغیر اعراب)

حدیث نمبر: 305
حدثنا أبو نعيم ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ حدثنا عبد العزيز بن أبي سلمة ، ‏‏‏‏‏‏عن عبد الرحمن بن القاسم ، ‏‏‏‏‏‏عن القاسم بن محمد ، ‏‏‏‏‏‏عنعائشة ، ‏‏‏‏‏‏قالت:‏‏‏‏ خرجنا مع النبي صلى الله عليه وسلم لا نذكر إلا الحج، ‏‏‏‏‏‏فلما جئنا سرف طمثت، ‏‏‏‏‏‏فدخل علي النبي صلى الله عليه وسلم وأنا أبكي، ‏‏‏‏‏‏فقال:‏‏‏‏ ما يبكيك ؟ قلت:‏‏‏‏ لوددت والله أني لم أحج العام، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ لعلك نفست ؟ قلت:‏‏‏‏ نعم، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ فإن ذلك شيء كتبه الله على بنات آدم، ‏‏‏‏‏‏فافعلي ما يفعل الحاج غير أن لا تطوفي بالبيت حتى تطهري.

حدیث کی عربی عبارت (مکمل اردو حروف تہجی میں)

حدیث نمبر: 305
حدثنا ابو نعیم ، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ حدثنا عبد العزیز بن ابی سلمۃ ، ‏‏‏‏‏‏عن عبد الرحمن بن القاسم ، ‏‏‏‏‏‏عن القاسم بن محمد ، ‏‏‏‏‏‏عنعائشۃ ، ‏‏‏‏‏‏قالت:‏‏‏‏ خرجنا مع النبی صلى اللہ علیہ وسلم لا نذکر الا الحج، ‏‏‏‏‏‏فلما جئنا سرف طمثت، ‏‏‏‏‏‏فدخل علی النبی صلى اللہ علیہ وسلم وانا ابکی، ‏‏‏‏‏‏فقال:‏‏‏‏ ما یبکیک ؟ قلت:‏‏‏‏ لوددت واللہ انی لم احج العام، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ لعلک نفست ؟ قلت:‏‏‏‏ نعم، ‏‏‏‏‏‏قال:‏‏‏‏ فان ذلک شیء کتبہ اللہ على بنات آدم، ‏‏‏‏‏‏فافعلی ما یفعل الحاج غیر ان لا تطوفی بالبیت حتى تطہری.

حدیث کا اردو ترجمہ

ہم سے ابونعیم فضل بن دکین نے بیان کیا، انہوں نے کہا ہم سے عبدالعزیز بن ابی سلمہ نے بیان کیا، انہوں نے عبدالرحمٰن بن قاسم سے، انہوں نے قاسم بن محمد سے، وہ عائشہ (رض) سے، آپ نے فرمایا کہ ہم رسول اللہ کے ساتھ حج کے لیے اس طرح نکلے کہ ہماری زبانوں پر حج کے علاوہ اور کوئی ذکر ہی نہ تھا۔ جب ہم مقام سرف پہنچے تو مجھے حیض آگیا۔ (اس غم سے) میں رو رہی تھی کہ نبی کریم تشریف لائے، آپ نے پوچھا کہ کیوں رو رہی ہو ؟ میں نے کہا کاش ! میں اس سال حج کا ارادہ ہی نہ کرتی۔ آپ نے فرمایا شاید تمہیں حیض آگیا ہے۔ میں نے کہا جی ہاں۔ آپ نے فرمایا یہ چیز تو اللہ تعالیٰ نے آدم کی بیٹیوں کے لیے مقرر کردی ہے۔ اس لیے تم جب تک پاک نہ ہوجاؤ طواف بیت اللہ کے علاوہ حاجیوں کی طرح تمام کام انجام دو ۔

حدیث کا انگریزی ترجمہ (English Translation)

Narrated Aisha (RA): We set out with the Prophet ﷺ for Hajj and when we reached Sarif I got my menses. When the Prophet ﷺ came to me, I was weeping. He asked, "Why are you weeping?” I said, "I wish if I had not performed Hajj this year.” He asked, "May be that you got your menses?” I replied, "Yes.” He then said, "This is the thing which Allah has ordained for all the daughters of Adam. So do what all the pilgrims do except that you do not perform the Tawaf round the Ka’bah till you are clean.”

اس پوسٹ کو آگے نشر کریں